ہندوستان کا تاریخی احساسِ کمتری ، ہولناک تضادات

آج ہندوستان صرف سیاسی معنوں میں نہیں بلکہ فکری اور تہذیبی معنوں میں بھی مغرب کا دُم چھلّا ہے ہندوستان دنیا کے اُن مماک میں شامل ہے جو نہ صرف یہ کہ ’’احساسِ برتری‘‘ میں مبتلا ہیں بلکہ وہ اپنے احساسِ برتری کو ’’جتلاتے‘‘ بھی رہتے ہیں۔ مگر یہ بات کسی کو معلوم نہیں کہ ہندوستان کے اس احساسِ برتری اور اس کو جتلانے کے عمل کی جڑیں ایک گہرے تاریخی ’’احساسِ کمتری‘‘ میں پیوست ہیں۔ ہندوستان کا یہ احساسِ کمتری نہ صرف یہ کہ اُسے چین سے نہیں جینے دے رہا، بلکہ اس احساسِ کمتری نے گزشتہ 71 سال…

مزید پڑھئے

عورت مارچ! سیکولر، لبرل دہشت گردی

پاکستان کے ’’جدیدیت زدگان‘‘ اکثر یہ بات کہتے ہیں کہ ’’جدیدیت‘‘ کا مطلب ’’مغربیت‘‘ یعنی Modernization کا مفہوم Westernization نہیں ہے، ان دونوں میں فرق ہے۔ لیکن یہ ایک صریح غلط بیانی ہے جو عوام و خواص کو دھوکا دینے کے لیے کی جاتی ہے۔ ورنہ اصل بات یہ ہے کہ جدیدیت مغربیت کے سواکچھ نہیں، بلکہ کراچی، لاہور اور اسلام آباد میں 8 مارچ کو ہونے والے نام نہاد عورت مارچ سے ثابت ہوگیا ہے کہ Modernization مغربیت سے آگے بڑھ کر Vulgarization بلکہ Dehumanization بھی بن سکتی ہے۔ ذرا آپ عورت مارچ میں موجود پلے کارڈز پر لکھی…

مزید پڑھئے

سیاست اور صحافت کا اخلاقی بحران

شاہنواز فاروقی اس بات پر تمام مذاہب اور عالمی مدبرین کے درمیان اتفاقِ رائے پایا جاتا ہے کہ معاشرہ کیا، تہذیب کی بقا کا اظہار بھی روحانی و اخلاقی اقدار کی پاسداری میں ہے۔ معاشرے اور تہذیبیں جب روحانی و اخلاقی تصورات سے انحراف کرنے لگتی ہیں تو وہ بیمار پڑ جاتی ہیں۔ بحران میں مبتلا ہوجاتی ہیں، اور اگر بحران کا حل تلاش نہ کیا جائے تو معاشرے کیا تہذیبیں بھی صفحۂ ہستی سے مٹ جاتی ہیں۔ اسلام، قرآنِ مجیدو فرقانِ حمید کے ذریعے مسلمانوں سے صاف کہتا ہے کہ پورے کے پورے اسلام میں داخل ہوجائو اور اللہ…

مزید پڑھئے